46

نئے آرمی چیف کی تعیناتی یا توسیع سے متعلق شہباز شریف کے بیان پر حکومتی ردِعمل آ گیا

اسلام آباد : پاکستان مسلم لیگ ن کے صدر شہباز شریف نے کہا کہ نئے آرمی چیف کی تعیناتی یا توسیع کا فیصلہ ملک وقوم کے مفاد میں کریں گے۔شہباز شریف کے اس بیان پر ردِعمل دیتے ہوئے وزیراعظم عمران خان کے معاون خصوصی ڈاکٹر شہباز گل نے کہا کہ شہباز شریف کا آرمی چیف کی تعیناتی یا ایکسٹینشن بارے بیان ان کی سیاسی بوکھلاہٹ کو واضح کر رہا ہے۔جس کا فیصلہ سال کے آخر میں ہونا ہے اس ایشو کو اپنی گندی سیاست میں استعمال کیا جا رہا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ شہباز صاحب آپ نے کیا فیصلہ کرنا اس وقت تک تو آپ جیل میں ہوں گے۔شہباز نواز ایک سکے کے دو رخ۔خیال رہے کہ گذشتہ روز اپوزیشن لیڈر شہباز شریف نے انٹرویو دیتے ہوئے کہا تھا کہ کہ نئے آرمی چیف کی تعیناتی یا توسیع کا فیصلہ ملک وقوم کے مفاد میں کریں گے،انہوں نے آر می چیف کی مدت میں توسیع یا نئے آرمی چیف کی تعیناتی کے سوال پر جواب دیا کہ یہ ابھی قبل ازوقت سوال ہے، اگر اللہ ایسی کوئی صورت بناتا ہے اور اللہ موقع دیتا ہے تو اس کا ایک عمل موجود ہے، آئین اور قانون کے تحت ملک کے بہتر مفاد میں فیصلہ کریں گے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں